رمیز راجہ نے میچ کے بعد میڈیا ٹاک کو غیر ضروری قرار دے دیا

جاپانی ٹینس اسٹار ناؤمی اوساکا کی جانب سے فرنچ اوپن میں میڈیا کے بائیکاٹ اور بعد ازاں ایونٹ سے دستبردار ہونے کے حوالے سے رمیز نے خلیجی اخبار سے بات چیت میں کہاکہ میں ان کی میڈیا کے حوالے سے کیفیت کو سمجھ سکتا ہوں۔
انہوں نے کہا کہ جب میں پاکستانی کپتان تھا تب مجھے بھارت سے ٹورنٹو میں سہارا کپ میچ ہارنے کے بعد نہ چاہتے ہوئے بھی میڈیا کا سامنا کرنے پر مجبور ہونا پڑا تھا، ہر شکست کے بعد میڈیا کے سامنے گزارے 20 منٹ میرے لیے مشکل ترین ہوتے تھے، اسی وجہ سے مجھے ریٹائرمنٹ لینا پڑی تھی۔
یاد رہے کٰہ قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شعیب ملک اور سابق کپتان و کمنٹیٹر رمیز راجہ کے درمیان ریٹائرمنٹ کے مشورے پر آپس میں طنز و مزاح جاری ہے۔
دونوں کھلاڑیوں کے درمیان ٹوئٹر پر نوک جھوک دیکھی گئی جہاں شعیب ملک نے رمیز راجہ کے شعیب ملک اور محمد حفیظ کو ریٹائرمنٹ لینے کے مشورے پر آمادگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ’ہم تینوں کیریئر کے اختتام پر ہیں، مل کر ریٹائر ہوجاتے ہیں، آئیں مل کر 2022 کےلیے اس کا منصوبہ بناتے ہیں‘۔

Close