بولڈ سین کی عکسبندی میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے

بولڈ سین کرتے ہوئے بہت مشکل ہوتی ہے

اداکارہ صبور علی نے انکشاف کیا ہے کہ بولڈ سین کی عکسبندی کے دوران مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے لیکن لوگوں کو صورتحال سمجھانے کے لیے ایسا کرنا بھی ضروری ہوتا ہے۔اداکارہ کچھ عرصہ قبل ایک انٹرویو میں جلوہ گر ہوئیں جہاں ان سے جیو ٹیلی ویژن کے سپر ہٹ ڈرامہ سیریل ‘فطرت’ سے متعلق سوالات کیے گئے۔
اداکارہ سے میزبان نے بولڈ سین کے حوالے سے پوچھا جس پر انہوں نے کہا کہ ایسے سین کرنے میں بہت زیادہ مشکل ہوتی ہے کہ پتہ نہیں کیمرے پر کیسا نظر آرہا ہوگا، ہم آپس میں ایک دوسرے سے پوچھ رہے ہوتے تھے کہ کہیں یہ کچھ زیادہ تو نہیں ہوگیا۔صبور نے کہا کہ صورتحال اس طرح کی ہوتی تھی کہ سمجھ نہیں آتا تھا سین کو کس طرح سے پیش کیا جائے جو دیکھنے والوں کو سمجھ آجائے، ہماری کوشش ہوتی تھی کہ کچھ بھی حد سے زیادہ نا ہو۔
اداکارہ کا کہنا تھا کہ میں اور اداکار علی عباس دونوں اس چیز کے خلاف تھے کہ اس طرح سے شوٹ نہیں ہونا چاہیے لیکن آخری فیصلہ ڈائریکٹر کا ہوتا تھا۔

Close