وزیر اعظم کے مشیر ڈاکٹر عشرت حسین نے استعفیٰ دے دیا

ذرائع نے کہا کہ وزیر اعظم نے اب تک ان کا استعفیٰ قبول نہیں کیا ہے — فائل فوٹو / وائٹ اسٹار
وزیر اعظم کے مشیر برائے ادارہ جاتی اصلاحات و کفایت شعاری ڈاکٹر عشرت حسین نے عہدے سے استعفیٰ دے دیا۔
ہ ڈاکٹر عشرت حسین نے اپنی استعفیٰ وزیر اعظم عمران خان کو بھیج دیا ہے، تاہم ان کے استعفے کی وجہ معلوم نہیں ہو سکی۔

جنرل پرویز مشرف کے دور حکومت میں اسٹیٹ بینک کے گورنر کے فرائض انجام دینے والے ڈاکٹر عشرت حسین نے استعفے سے متعلق تصدیق کے لیے رابطہ کرنے پر کوئی جواب نہیں دیا۔

ذرائع نے کہا کہ وزیر اعظم نے اب تک ان کا استعفیٰ قبول نہیں کیا ہے۔

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے کہا کہ وہ ڈاکٹر عشرت حسین کے استعفے سے متعلق رپورٹس کی تصدیق یا تردید نہیں کر سکتے۔

ڈاکٹر عشرت حسین وفاقی وزیر کی حیثیت سے اگست 2018 سے وفاقی کابینہ کا حصہ تھے اور انہوں نے وزیر اعظم آفس میں ادارہ جاتی اصلاحات سیل (آئی آر سی) قائم کیا تھا۔

آئی آر سی کی تشکیل کابینہ کے 28 اگست 2018 کے فیصلے کی روشنی میں عمل میں آئی تھی اور اسے سول سروس اصلاحات، کفایت شعاری اور حکومت کی تشکیل نو کے متعلق ٹاسک فورسز کے سیکریٹریٹ کے طور پر کام کرنا تھا۔

Close