طالبان امریکہ کے ساتھ امن میں شراکت دار بن سکتے ہیں

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ طالبان افغانستان میں قیام امن کے لیے امریکہ کے ساتھ شراکت دار بن سکتے ہیں ۔

 عمران خان نے امریکی میگزین کو انٹریو کے دوران بتایا کہ  افغانستان میں عبوری دور مشکل ہے لیکن طالبان کے مکمل کنٹرول سے امن کی اُمید ہے۔

افغانستان میں ٹی ٹی پی اور دوسرے دہشتگرد گروپس کو غیر موثر کرنے کے لیے افغان حکومت کے ساتھ کام کرنا ہوگا، امریکا اور خطے کی طاقتوں کے درمیان تعاون ہی تباہی سے بچنے کا واحد راستہ ہے۔

 وزیراعظم  نے مزید کہا کہ پر امن افغانستان پاکستان کے مفاد میں ہے، سی پیک کی وجہ سے تجارت اور ترقیاتی منصوبوں کے امکانات بڑھ رہے ہیں، طالبان نے سی پیک منصوبوں کا خیر مقدم کیا۔

انہوں نے کہا کہ سابق حکومتوں کی ناکامیوں سے افغانستان کو انسانی بحران کا سامنا ہے، افغانستان میں استحکام اور انسانی بحران کے خاتمے کے لیے اس کی مدد کرنا ہوگی۔

Back to top button