افغانستان:مسجد میں خوفناک دھماکہ، بھاری جانی نقصان

افغانستان کے شمال مشرقی صوبے قندوز کی ایک مسجد میں نماز جمعہ کے دوران دھماکے کے نتیجے میں 50 افراد جاں بحق اور درجنوں زخمی ہوگئے۔

طالبان پولیس کے مطابق زخمی افراد کو قریبی طبی مراکز منتقل کر دیا گیا ہے ، قندوز کے ڈپٹی پولیس چیف دوست محمد عبیدہ نے بتایا کہ جاں بحق افراد کے حوالے سے تفصیلات اکٹھا کی جا رہی ہیں ۔

اس سے قبل طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے اپنے ٹوئٹر بیان میں بتایا تھا کہ دھماکے میں اہلِ تشیع برادری سے تعلق رکھنے والے متعدد افراد جاں بحق اور کئی زخمی ہوگئے ، طالبان فورسز کا سپیشل یونٹ جائے وقوع پر پہنچ گیا ہے اور واقعے کی تفتیش شروع کردی گئی ہے۔

ڈاکٹرز ود آؤٹ بارڈرز کے ذرائع کا کہنا تھا کہ دھماکے میں ہلاک ہونے والے 15 افراد کی نعشیں نکال لی گئی ہیں ، مقامی ہسپتال کے ملازم نے بھی 15 افراد کی نعشوں کی تصدیق کی ہے تاحال کسی دہشتگرد گروپ نے دھماکے کی ذمہ داری قبول نہیں‌ کی ہے۔

اس سے قبل 3 اکتوبر کو افغانستان کے دارالحکومت کابل میں بھی عیدگاہ مسجد کے دروازے کے قریب دھماکہ ہوا تھا جس میں طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد کی والدہ کا تعزیتی اجلاس جاری تھا۔

Back to top button