دنیا کی بہترین آل راؤنڈر بننا چاہتی ہوں

پاکستان ویمن کرکٹ ٹیم کی آلراؤنڈر عالیہ ریاض کا کہنا ہے کہ وہ کوچز کی نگرانی میں بیٹنگ اور بولنگ کو روزبہتر کرنے کی کوشش کررہی ہیں اور چاہتی ہیں کہ دنیا کی بہترین آلراؤنڈر ز میں شامل ہوں۔کراچی میں قومی ویمن ٹیم کے کیمپ کے دوران پریس کانفرنس کرتے ہوئے عالیہ ریاض نے کہا کہ ان کی کوشش ہوتی ہے کہ وہ اپنے رول کے حساب سے کھیلیں اور ٹیم کیلئے زیادہ سے زیادہ کردار ادا کریں ۔
انہوں نے کہا کہ بطور آلراؤنڈر ان کی کوشش ہوتی ہے کہ ہر شعبے میں اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کریں ۔انگلینڈ سے سیریز کے حوالے سے عالیہ ریاض نے کہا کہ انگلینڈ مشکل حریف ہے لیکن پاکستان ٹیم نے بھرپور تیاریاں کی ہیں، انگلینڈ کوپہلے ہرا چکے ہیں، دوبارہ بھی شکست دے سکتے ہیں۔
ستائیس سالہ عالیہ ریاض نے کہا کہ پاکستان ٹیم نے انگلینڈ کے خلاف سیریز کی تیاریوں کے لیے انگلش پلیئر کی ویڈیوز دیکھی ہیں اور اس حساب سے حکمت عملی بھی بنائی ہے،ان کے فاسٹ بولرز سے نبرد آزاما ہونے کے لیے کیمپس میں لڑکوں کی بولنگ کا سامنا کیا ہے تاکہ پیس کی پریکٹس کی جاسکے۔
ایک سوال پر چوبیس ون ڈے اور چھتیس ایک روزہ میچز میں پاکستان کی نمائندگی کرنے والی عالیہ ریاض کا کہنا تھا کہ ثنا میر پاکستان ٹیم کی سینئر پلیئر ہیں، سیریز میں ان کے تجربے کی کمی محسوس کی جائے گی۔ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ پچھلے چند سال کے دوران پاکستان ویمن ٹیم میں بہتری آئی ہے ، ہر کوچ نے اپنے حساب سے ٹیم کو بہتر بنانے میں کردار ادا کیا، مارک کولس نے بھی ٹیم کے لیے اچھا کام کیا اور اب اقبال امام بھی اچھا کام کررہے ہیں جب کہ ہر پلیئر کوچز سے زیادہ سے زیادہ سیکھنے کی کوشش کرتی ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close