دنیا کا مہنگا ترین ’کیلا ‘، قیمت 2 کروڑ روپے

پاکستان میں درجن کے حساب سے فروخت ہونیوالا ’کیلا ‘بہت مہنگا بھی ہو تو100 سے 150 تک ہی فروخت ہو پاتا ہے لیکن امریکہ میں ایک عام کیلا ڈیڑھ لاکھ امریکی ڈالر یعنی پاکستانی تقریباً 2 کروڑ 30 لاکھ روپے سے زائد میں فروخت ہوا۔
آرٹ میوزیم میں فروخت کے لیے تین کیلے پیش کیے گئے تھے—فوٹو: سی این اینذرائع کے مطابق امریکی ریاست فلوریڈا کے شہر میامی بیچ کے ایک آرٹ میوزیم میں فروخت کے لیے پیش کیے گئے تین میں سے 2 کیلے فروخت ہوگئے۔رپورٹ کے مطابق فروخت کے لیے پیش کیے گئے دونوں کیلے ڈیڑھ لاکھ امریکی ڈالر کے عوض فروخت ہوئے یعنی ہر کیلا پاکستانی 2 کروڑ 32 لاکھ روپے سے زائد کی رقم میں فروخت ہوا۔
رپورٹ میں بتایا گیا کہ میامی بیچ کے مذکورہ آرٹ میوزیم میں تین کیلوں کے سیٹ کا واحد کیلا تاحال موجود ہے اور منتظمین کو امید ہے کہ بچ جانے والا کیلا بھی ایک لاکھ 20 ہزار امریکی ڈالر یعنی پاکستانی 2 کروڑ روپے کے قریب تک فروخت ہوجائے گا۔
میامی بیچ کے آرٹ میوزیم میں فروخت کیے گئے تینوں کیلوں کی خاص بات یہ تھی کہ انہیں میوزیم کی دیوار سے ایک خاص طرح کے ’ٹیپ سے چپکایا گیا تھا۔کیلوں کو عام پیکنگ کے لیے استعمال ہونے والی ٹیپ سے دیوار پر چپکایا گیا تھا۔اگرچہ رپورٹ میں کیلوں کو خریدنے کی رقم اور ٹیپ کے اخراجات نہیں بتائے گئے، تاہم بتایا گیا کہ فروخت کے لیے پیش کیے گئے کیلوں کو مقامی پھل فروش کی دکان سے خریدا گیا تھا۔
کیلوں کو دیوار سے لٹکانے کے شاہکار آرٹ کو کئی لوگوں نے سراہا—فوٹو: انسٹاگرامتینوں کیلوں کو اٹلی کے ماہر آرٹسٹ نے پھل فروش کی دکان سے خرید کر پیکنگ میں استعمال ہونے والی ٹیپ سے دیوار سے چپکا کر آرٹ کا شاہکار پیش کیا تھا اور لوگوں نے اس سے متاثر ہوکر تین میں سے 2 کیلے خرید لیے۔
رپورٹ میں بتایا گیا کہ اٹالین آرٹسٹ نے مذکورہ آرٹ کو پیش کرنے کے لیے کئی سال تک محنت کی اور وہ ہر وقت کیلوں کے آرٹ کو پیش کرنے کے لیے پریشان رہے۔رپورٹ کے مطابق اٹلی کے ماہر نے ابتدائی طور پر آرٹ میوزیم میں کانسی اور اسٹیل سمیت دیگر چیزوں سے تیار کردہ کیلوں کو پیش کرنے سے متعلق بھی سوچا، تاہم وہ اپنے ہی خیال پر عمل نہ کر سکے اور انہوں نے مصنوعی کیلے کے بجائے اصلی کیلے کو آرٹ میں پیش کیا۔
دیوار سے چپکے کیلوں کے ساتھ لوگوں نے تصاویر بھی بنوائیں—فوٹو: آرٹ نیٹآرٹ منتظمین نے اصلی کیلوں کو دیوار پر اس طرح لٹکانے کے آرٹ کو ’عالمی کاروبار‘ سے تشبیہہ دی اور کہا کہ اگر فرض کیا جائے کہ دنیا کے تمام کیلے یوں ہی دیواروں پر لٹکے رہے یا کسی اور جگہ پڑے پڑے سڑ جائیں تو کیا ہوگا؟منتظمین کا کہنا تھا کہ آرٹ کے شوقینوں نے کیلوں کو دیوار پر لٹکانے کے پیغام کو درست سمجھ کر ہی انہیں خریدا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Content is protected !!
Close