بالآخر حریم شاہ کی اپنی گندی ویڈیو بھی آ ہی گئی

بکرے کی ماں آخر کب تک خیر مناتی۔ بالآخر سیاستدانوں کی ویڈیوز اور آڈیو کالز لیک کرکے ان کی عزتوں کا جنازہ نکالنے والی ٹک ٹاک سٹار حریم شاہ کی اپنی بدکاری کی ویڈیو بھی مارکیٹ آ گئی ہے ۔ ویڈیو اتنی ننگی اور شرمناک ہے کہ اسے نہ تو دیکھا جا سکتا ہے اور نہ ہی دکھایا جا سکتا ہے۔ ویڈیو جاری کرنے والے کی شناخت بھی ابھی تک سامنے نہیں آ سکی لیکن اسے سوشل میڈیا پر وائرل کرنے والا وہی شخص ہو سکتا ہے جس کے ساتھ حریم شاہ جنسی عمل میں مصروف دکھائی دیتی ہے۔

حالیہ دنوں میں حریم شاہ کی بڑھتی ہوئی دشنام طرازیوں کے بعد سوشل میڈیا پر بھولا ریکارڈ نامی ایک شخص نے دھمکی دی تھی کہ وہ حریم کو مزہ چکھانے جا رہا ہے اور اب اس کی اپنی ننگی ویڈیوز سوشل میڈیا پر وائرل ہوں گی۔ یاد رہے کہ سوشل میڈیا پر شیخ رشید اور دیگر حکومتی وزراء کی تصاویر، آڈیو کالزاور ویڈیو کالز جاری ہونے کے بعد حکومتی ایوانوں میں ایک طوفان آگیا تھا اور یہ معاملہ اتنا سیریس ہو گیا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کو کابینہ کے اجلاس میں اپنے وزراء کی سرزنش کرتے ہوئے یہ وارننگ جاری کرنا پڑی کہ آئندہ ان میں سے کوئی بھی شخص ٹک ٹاک گرلز کے نزدیک بھی جانے کی کوشش نہیں کرے گا تاہم یاد رہے کہ عمران خان کی اپنی تصاویر حریم شاہ کے ساتھ سوشل میڈیا پر وائرل ہیں۔

حریم کی تازہ ترین ننگی ویڈیو کے بارے میں معلوم ہوا ہے کہ اسے ایک نوجوان وفاقی وزیر نے شوٹ کیا تھا جو کہ ایک سابق گورنر کے خاندان سے تعلق رکھتے ہیں اور اب حریم کی بڑھتی ہوئی کارروائیوں کے بعد سمجھتے تھے کہ اس کا احتساب کیا جانا چاہئے چنانچہ اس ویڈیو کو سوشل میڈیا پر وائرل کر دیا گیا ہے۔ ذرائع نے یہ دعویٰ بھی کیا ہے کہ حریم کی یہ ویڈیو جاری کرنے والے وزیر نے ہی دراصل اسے شوٹ بھی کیا تھا اور ٹک ٹاک گرل کے ساتھ بد کاری میں مصروف عمل شخص بھی وہی وزیر موصوف ہے لیکن اس ویڈیو کو سوشل میڈیا پر جاری کرنے کا رسک اس لئے لیا گیا کہ ویڈیو میں سارا فوکس حریم شاہ کے چہرے اور جسم پر ہے جبکہ بدکاری میں مصروف شخص اس لیے نظر نہیں آتا کہ اس ویڈیو کو وہ خود شوٹ کر رہا ہے۔

یاد رہے کہ پچھلے دنوں یہ انکشاف ہوا تھا کہ ٹک ٹاک سٹارز حریم شاہ اور صندل خٹک دراصل کال گرلز بن چکی ہیں جو پاکستان میں اور ملک سے باہر اب باقاعدہ جسم فروشی کا دھندہ کر رہی ہیں اور دبئی میں گاہک ڈھونڈنے کے لئے انہوں نے نیہا نام کی ایک عورت کو اپنا منیجر مقرر کر رکھا ہے۔

دونوں ٹک ٹاک سٹارز حریم اور صندل پچھلے کئی ہفتوں سے بیرون ملک دبئی میں قیام پذیر ہیں اور اس دوران ان کی مختلف اماراتی شیخوں کے ساتھ تصاویر اور ویڈیوز سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہیں۔ ذرائع کے مطابق حریم شاہ اور صندل خٹک دبئی میں اچھا وقت گزارنے کے لیے ایک گھنٹے کے 1500 سے 2000 درہم فیس وصول کرتی ہیں جبکہ شب بسری کے لیے یہ 5000 درہم وصول کرتی ہیں۔

اپنی ان غلط کاریوں کے باعث اب یہ دونوں لڑکیاں پاکستان واپس آنے سے بھی گھبرا رہی ہیں اور کینیڈا کی شہریت لینے کی کوششوں میں مصروف ہیں۔ پچھلے دنوں حریم شاہ کے والد سید ضرار حسین شاہ نے سوشل میڈیا پر روتے ہوئے اپنا ویڈیو پیغام جاری کیا تھا جس میں انہوں نے اپنی بیٹی کے کرتوتوں پر معافی مانگتے ہوئے شرمندگی کا اظہار کیا تھا اور کہا تھا کہ اللہ تعالیٰ انہیں قربانی دینے کی ہمت عطا فرمائے اور ان کی قربانی کو قبول بھی فرمائے ، حریم شاہ اپنے والد کے اس پیغام سے خوفزدہ ہو چکی ہے۔

تازہ ترین اطلاع یہ ہے کہ ٹک ٹاک سٹارز حریم شاہ اور صندل خٹک کو اب دبئی سے ڈی پورٹ کردیا گیا ہے۔ حریم اور صںدل کو ناپسندیدہ سرگرمیوں کے باعث ڈی پورٹ کیا گیا ہے ۔ بتایا گیا ہے کہ دونوں لڑکیوں کو غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث پایا گیا۔ ذرائع کا کہنا ہے حال ہی میں دبئی کی مشہور عرب شخصیات کے ساتھ وائرل ہونے والی دونوں لڑکیوں کی تصاویر اور ویڈیوز ڈی پورٹ کیے جانے کی بنیادی وجہ ہے۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ ان دونوں ٹک ٹاک گرلز کا کیا انجام ہوتا ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button