تھرپارکرمیں غذا کی کمی اورمتعد امراض کے باعث اموات کا سلسلہ جاری

ذرائع محکمہ صحت کے مطابق تھرپارکرمیں غذائی قلت اوردیگرامراض کے باعث مزید 3 بچے انتقال کرگئے۔
رواں ماہ تھرپارکرمیں غذائیت کی کمی اوردیگرامراض کے باعث سرکاری اسپتالوں میں30 بچے انتقال کرگئے۔ ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ اس مہینے میں غذائی کمی اوردیگرا مراض سے تھرکے لوگ اب تک 30 بچوں کا انتقال ہو چکا ہے۔
خیال رہے کہ سندھ کے ضلع تھر پارکر میں خوراک اورپانی کی کمی کے باعث رہائشیوں کو شدید مشکلات کا سامنا رہتا ہے، جس وجہ سے وہ ہمیشہ ایسے مسائل کا شکاررہتے ہیں جن میں انسانی جانوں کا زیادہ ضیاع ہوتا ہے جن میں زیادہ تر تعداد بچوں کی ہوتی ہے۔
صحت کی سہولیات میں کمی کے باعث تھر پارکرکے دورافتادہ علاقوں میں کمسن بچے اکثرغذائیت کی کمی اورجان لیوا بیماریوں کا شکارہوکرجاں بحق ہو جاتے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close