جنوبی افریقی شخص دوماہ سےہوامیں معلق ڈرم میں رہائش پذیر

جنوبی افریقا کے ایک مہم جونےفضا میں رہنے کا اپنا ہی ریکارڈ توڑنے کے لیے ایک ڈرم میں رہنا شروع کردیا تاحال انہیں دو ماہ گزرچکے ہیں۔
افریقی میڈیا کےمطابق مہم جوورنن کروگرنے زمین سے25 میٹربلندی پرایک کھمبا گاڑا جس پرپانی کا ایک پیپا (بیرل) ٹکا دیا، ورنن مسلسل دوماہ سےاس میں رہائش پذیرہیں اورکئی برس قبل قائم اپنا ہی ریکارڈ توڑنےمیں کوشاں ہیں۔ وہ 14 نومبر سےوہیں موجود ہیں۔ یہ ڈرم اتنا تنگ ہے کہ وہ مشکل سے ہی اس میں سماسکتےہیں لیکن ساری تکلیف اپنا ہی ایک ریکارڈ توڑنے کےلیےکررہےہیں بس چند دن بعدوہ اپناریکارڈ برابرکردیں گےاور1997ء میں قائم اپنا ہی ریکارڈ توڑیں گےاوریوں وہ دوبارہ گنیزبک آف ورلڈ ریکارڈ میں اپنا نام شامل کرواسکیں گے۔

مہم جوورنن کروگرکے لیےاب شراب کا یہ ڈرم ہی رہائشی کمرا ہے جہاں وہ مشکل سے رہتے ہیں اورجگہ کی تنگی کے سبب دن بھرانہیں ہڈیوں اورکمر کےدرد کا سامنا رہتا ہےاس لیے کہ وہ سوتے وقت ہاتھ پاؤں تک نہیں پھیلا سکتے۔ کروگرنے بتایا کہ ڈرم میں بیٹھنا آسان ہے لیکن اتنی تنگی میں سونا بہت مشکل ہے،‘ ورنن کروگرکےمطابق انہیں عین اس پوزیشن میں سونا پڑتا ہےجیسے ماں کے پیٹ میں بچہ سکڑی ہوئی پوزیشن میں ہوتا ہے،وہ رفع حاجت بھی وہیں کرتےہیں جوایک سوراخ سےپھسل کرپائپ کےذریعےنیچےاترجاتی ہے، نیچےموجود ان کی ٹیم انہیں پانی اورکھانا ایک بالٹی کےذریعےاوپر پہنچاتی ہے۔

کروگرکواس کا خیال چھٹیوں میں اس وقت آیا جب وہ پام کے درخت پرچڑھ کربیٹھےتھے۔ ورنن نے سوچا کیا کوئی اونچے مقام پرکسی ڈبے میں بیٹھ کروقت گزارسکتا ہے؟ اس سے قبل انڈونیشیا میں یہ ریکارڈ قائم ہوا تھا۔قبل ازیں وہ ایسے ہی ڈرم میں بیٹھنے کا 54 روزہ ریکارڈ قائم کرچکے ہیں۔ اس باروہ ڈرم میں بیٹھنے کا 67 روزہ ریکارڈ قائم کرنا چاہتے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close