آصف زرداری اور فریال تالپور پر فرد جرم عائد نہ ہوسکی

احتساب عدالت راولپنڈی نے میگا منی لانڈرنگ اور پارک لین ریفرنس میں سابق صدر آصف علی زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور سمیت دیگر ملزمان پر فرد جرم عائد کرنےکی کارروائی مؤخر کردی گئی۔
آصف علی زرداری بیماری کے باعث احتساب عدالت میں پیش نہ ہوئے جب کہ ملزم انور مجید کو آج کراچی سے عدالت پیش نہیں کیا جاسکا۔
عدالت نے نیب کو ملزم انور مجید کو ائیر ایمبولینس کے ذریعے عدالت لانے کےلیے انتظامات کرنے کی ہدایت کردی۔
سابق صدر کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے عدالت کو بتایا کہ آصف زرداری علیل ہیں، آج عدالت نہیں آ سکتے، جس پر عدالت نے آصف علی زرداری کی آج حاضری سے استثنیٰ کی درخواست منظور کرلی۔ نیب پراسیکیوٹر نے عدالت میں مؤقف اپنایا کہ جن ملزمان کی تفتیش مکمل ہے ان پر فرد جرم عائد کر دیں۔
آصف زرداری اور فریال تالپور کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے کہا کہ عبوری ریفرنس پر کیسے فرد جرم عائد کی جا سکتی ہے؟
تفتیشی افسر نے عدالت کو آگاہ کیا کہ ملزمان کے خلاف تفتیش جاری ہے، نئے شواہد ملنے کی صورت میں ضمنی ریفرنس دائر کریں گے۔ وکیل صفائی نے کہا کہ ضمنی ریفرنس کی کاپیاں ابھی تک فراہم نہیں کی گئیں جس پر عدالت نے ملزمان کو ریفرنس کی کاپیاں فراہم کرنے کا حکم جاری کر دیا۔
احتساب عدالت نے پارک لین ریفرنس اور میگا منی لانڈرنگ کیس کی سماعت 11 فروری تک ملتوی کر دی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close