پاک بھارت مقابلے عالمی کرکٹ کےلیے ناگزیر ہیں

پاکستان کرکٹ ٹیم کے بولنگ کوچ اور سابق فاسٹ بولر وقار یونس نے کہا ہے کہ کرکٹ مداحوں کو اچھی کرکٹ سے محرومی سے بچانے کےلیے پاکستان اور بھارت کا آپس میں کرکٹ کھیلنا بہت ضروری ہے۔
ایک سوشل میڈیا انٹرویو میں سابق پیسر وقار یونس نے کہا کہ پاک بھارت مقابلے دنیا بھر میں توجہ کا مرکز بنتے ہیں، اگر دونوں ملکوں کے شائقین سے پوچھا جائے تو ان میں سے 95 فیصد کہیں گے کہ روایتی حریفوں کو باہمی میچز کھیلنا چاہیئں، میں بھی یہی سمجھتا ہوں کہ دونوں ٹیموں کو نہ صرف آپس میں کھیلنے بلکہ تسلسل کے ساتھ مقابلے شیڈول کرتے رہنے کی ضرورت ہے، شائقین کو جاندار مقابلوں سے محروم رکھنا درست نہیں ہوگا۔
انہوں نے امید ظاہر کی کہ پاکستان اور بھارت کی ٹیمیں آپس میں کرکٹ ضرور کھیلیں گی مگر یہ نہیں معلوم کہ ایسا کب ہوگا۔ وقار یونس نے مزید کہا کہ جب بھی دونوں کرکٹ کھیلیں، ضروری ہے کہ ہوم یا اووے وینیو پر کھیلیں یعنی پاکستان یا بھارت، نیوٹرل وینیو پر دونوں کے درمیان کرکٹ کا فائدہ نہیں، فینز بھی دونوں ٹیموں کو اپنے اپنے ہوم گراؤنڈز پر دیکھنا چاہتے ہیں۔2003 ورلڈ کپ میں پاکستان ٹیم کی قیادت کرنے والے وقار یونس نے شاہد آفریدی اور گوتم گمبھیر کو بھی مشورہ دیا کہ دونوں تحمل اور سمجھداری کا مظاہرہ کریں اور آپس کی نوک جھوک ختم کریں۔
وقار یونس نے دونوں کرکٹرز کو مشورہ دیا کہ وہ دنیا کے کسی بھی کونے میں ملاقات کریں اور آپس میں بیٹھ کر بات کرکے معاملات حل کریں، یہ چیزیں سوشل میڈیا پر لوگ تو انجوائے کرتے ہیں لیکن اس کا اثر اچھا نہیں، اس لیے دونوں سمجھداری کا مظاہرہ کریں۔ ایک اور سوال پر سابق کپتان نے بھارتی اداکارہ کاجول کو اپنے پسندیدہ ادکاروں میں سے ایک قرار دیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close