ہم 15 دن میں واپس آجائیں گے،مفرور قیدی جیلر کے نام خط چھوڑ گئے

جیل سے فرار کا یہ دلچسپ واقعہ اٹلی میں اسی ماہ پیش آیا ہے جس میں دو قیدی صرف جیل سے فرار ہی نہیں ہوئے بلکہ جیلر کے نام خط بھی چھوڑ گئے کہ وہ 15 دن بعد واپس آجائیں گے۔
داواد زوکانووِچ اور لیل احمتووِچ نامی دو قریبی رشتہ دار جعلسازی اور فراڈ کے جرم میں روم کی ربیبیا جیل میں قید تھے۔ ان دونوں کی سزا 2029 تک کےلیے تھی۔
تاہم اس ماہ کے آغاز میں ان دونوں نے کسی ہالی ووڈ فلم جیسا انداز اختیار کیا اور جیل سے فرار ہوگئے۔ البتہ، اس پورے واقعے میں دلچسپی کا پہلو یہ ہے کہ وہ جیلر کے نام ایک خط چھوڑ گئے جس میں لکھا تھا کہ ان دونوں کی بیویاں ان کے جرائم میں شریک ہونے کی وجہ سے جیل میں بند ہیں لیکن اُن کے بچوں کو گھر پر کچھ مسائل کا سامنا ہے جنہیں حل کرنے کےلیے ان کا وہاں موجود ہونا ضروری ہے کیونکہ فی الحال کوئی اور ایسا نہیں جو ان معاملات کو سنبھال سکے۔
اس لیے وہ صرف پندرہ دنوں کےلیے جیل سے فرار ہورہے ہیں اور زیادہ سے زیادہ پندرہ دنوں میں خود ہی جیل واپس آجائیں گے۔
ربیبیا جیل حکام نے اس خط کے اصلی ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ اٹلی کی پولیس نے زوکانووِچ اور احمتووِچ کی تلاش شروع کردی ہے لیکن اس خط نے یہ پورا واقعہ دلچسپ بنا دیا ہے اور اسے جیل سے فرار کے دیگر واقعات سے بالکل مختلف کردیا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close