کورونا ٹیسٹ اب قوت مدافعت بھی بتائے گا

جب سے عالمگیر وبا کورونا وائرس نے اس دنیا کو اپنی لپیٹ میں لیا ہے تو تب سے ہی تمام لوگ خوفزدہ ہو چکے ہیں، ہر کسی کو اپنے مدافعتی نظام کی فکر ہوگئی ہے اور سب کے دل میں اب بس ایک ہی سوال ہے کہ کیا ہمارا مدافعتی نظام ایسا ہے کہ وہ ہمیں وائرس سے محفوط رکھ سکے۔
اب حال ہی میں اس حوالے سے ایک نئی پیش رفت سامنے آئی ہے جس کے مطابق ایک تیز، آسان اور نیا اینٹی باڈی ٹیسٹ سارس سی او وی 2 کے خلاف طویل مدتی مدافعتی تحفظ سے متعلق بتا سکتا ہے۔ ہم سب جانتے ہیں کہ کورونا وائرس کسی بھی شخص کو دوبارہ بھی ہو سکتا ہے، اور کورونا وائرس سے متاثر ہونے والے شخص میں چند مہینوں میں ہی اینٹی باڈیز ناقابل شناخت حد تک کم ہو جاتی ہیں۔ لائف سائنس کمپنی جین اسکرپٹ نے ایک نیا اینٹی باڈی ٹیسٹ متعارف کرایا ہے جو کہ ہمیں یہ بتاتا ہے کہ ہم وائرس سے کیسے لڑ سکتے ہیں۔
جین اسکرپٹ کے ٹیسٹ کے نتائج کی وضاحت کے مطابق اس ٹیسٹ میں وائرس کو ناکام بنانے والی اینٹی باڈیز کو نشانہ بنایا گیا ہے، نتائج سے یہ معلوم ہوتا ہے کہ ہم کورونا وائرس اور مدافعت کے حوالے سے اپنی سمجھ بوجھ پر غور کریں اور یہ مستقبل میں کورونا کی ویکسین کےلیے مؤثر ثابت ہوگا۔ اس ‘سی پاسس’ ٹیسٹ کا امریکی ڈرگ اینڈ ریگولیٹری اتھارٹی (ایف ڈی اے) کی جانب سے جائزہ لیا جا رہا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close