کرونا سے بچاؤ کےلیے 15 لاکھ روپے کا ماسک

جاپان کی ایک کمپنی نے کرونا وائرس سے بچنے کےلیے بہت ہی خاص قسم کا ماسک تیار کیا ہے جس کی قیمت دس لاکھ ین (تقریباً 15 لاکھ 28 ہزار پاکستانی روپے) مقرر کی گئی ہے۔
ہاتھ سے بنائے گئے اس ماسک میں 0.7 قیراط ہیرے کے علاوہ 330 سچے موتی اور مہنگے کرسٹل کے 300 سے زائد چھوٹے چھوٹے ٹکڑے لگائے گئے ہیں۔ یہ ماسک ایک مقامی جاپانی کمپنی ’’کوکس کو‘‘ نے تیار کیا ہے جس کا مقصد امیر اور جامہ زیب گاہکوں کو اپنی طرف متوجہ کرتے ہوئے اپنے کاروبار کو وسعت دینا ہے۔ یہ ماسک جاپان میں اس کمپنی کی دکانوں کے علاوہ ’’ماسک ڈاٹ کوم‘‘ نامی ویب سائٹ پر بھی دستیاب ہے جہاں اسی ادارے کے بنائے ہوئے 200 اقسام کے مہنگے ماسک بھی فروخت کےلیے موجود ہیں، جن کی کم از کم قیمت 500 ین سے شروع ہوتی ہے۔ بعض صارفین کو اعتراض ہے کہ جو کوئی بھی یہ ماسک پہنے گا اسے لازماً بہت قیمتی اور خوبصورت لباس بھی پہننا پڑے گا، لیکن یہ بات بھی صاف ظاہر ہے کہ جو شخص صرف خوبصورت اور منفرد نظر آنے کےلیے پہنے گا وہ اپنے باقی لباس کی خوبصورتی پر بھی کوئی سمجھوتہ نہیں کرے گا. اتنا مہنگا ہونے کے باوجود یہ دنیا کا مہنگا ترین کرونا ماسک نہیں بلکہ یہ اعزاز ایک اسرائیلی جوہری کے بنائے ہوئے کرونا ماسک کے پاس ہے جس کی تیاری میں 18 قیراط کا 250 گرام سونا استعمال کیا گیا ہے جبکہ اس کی قیمت بھی 15 لاکھ امریکی ڈالر (تقریباً 24 کروڑ پاکستانی روپے) مقرر کی گئی ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Content is protected !!
Close