سستے روسی تیل کی درآمد سے عوام کو 42 روپے فی لٹر کا ریلیف متوقع

پاکستانی عوام کے کیلئے خوشی کی خبر یہ ہے کہ  روس پاکستان کو انتہائی سستا تیل دینے پر تیار ہو گیا  ہے جس کے باعث عوام کو 42 روپے فی لٹر ریلیف ملنے کا امکان ہے۔

باخبر ذرائع کے مطابق روس پاکستان کو بھارت اور چین جیسے ریٹ پر سستا تیل دے گا، بھارت اور چین روس سے عالمی مارکیٹ ریٹ سے 20 ڈالر فی بیرل سستا تیل لے رہے ہیں،روس پاکستان کو بھی برینٹ آئل مارکیٹ کے مقابلے میں 20 سے 30 ڈالر فی بیرل سستا تیل دے گا۔

باوثوق  وزارت پٹرولیم ذرائع کا کہنا تھا کہ روس سے پٹرولیم مصنوعات کی خریداری کے معاملہ پر جنوری میں پیش رفت متوقع ہے، روس کے ساتھ انشورنس، شپنگ اور دیگر چارجز پر بات ہونا باقی ہے، روس سے ساڑھے 65 ڈالر فی بیرل تک تیل درآمد ہونے کا امکان ہے، تمام بین الاقوامی ٹیکسز شامل کرکے پٹرول کی ایکس ریفائنری قیمت 41 سینٹ فی لٹر تک ہو گی۔

نئے آرمی چیف کا سویلین سپریمیسی تسلیم کرنے کا اعلان

باخبر ذرائع نےمزید بتایا کہ درآمدی تیل آنے پر پٹرول کی قیمت 42 روپے فی لٹر کم ہو سکتی ہے کیونکہ پٹرول کی ایکس ریفائنری قیمت 92 روپے 27 پیسے لٹر بنتی ہے اور پٹرول پر فی لٹر مقامی ٹیکس 90 روپے تک ہیں۔

Related Articles

Back to top button