حکومت کا کرونا وائرس پر قومی اسمبلی کا اجلاس 11 مئی کو بلانے کا فیصلہ

وفاقی حکومت نے کورونا وائرس کے معاملے پر قومی اسمبلی کا اجلاس 11 مئی کوسہ پہر 3 بجے بلانے کا فیصلہ کرلیا۔
قومی اسمبلی کا اجلاس طلب کرنے کے معاملے پر سید فخرامام کی زیر صدارت خصوصی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں سیاسی جماعتوں کے پارلیمانی رہنماؤں نے شرکت کی۔اجلاس میں قومی اسمبلی کا اجلاس 11 مئی کو طلب کرنے کا فیصلہ کیا گیا جو پیر کو تین بجے شروع ہوگا۔
دوسری جانب پارلیمانی رہنماؤں کے اجلاس کے بعد وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کا میڈیا سے گفتگو میں کہنا تھا کہ پیرکو 3 بجے پارلیمنٹ کا اجلاس بلایا جائے گا۔انہوں نے بتایا کہ اجلاس ایک دن کے وقفے سے جاری رہے گا جبکہ طے ہوا کہ اس اجلاس میں کورم کی نشاندہی نہیں کی جائے گی اور اسے کورونا وبا تک محدود رکھا جائے گا۔ان کا کہنا ہے کہ پریس گیلری کے علاوہ وزیٹرز کو پارلیمنٹ کے اجلاس میں شرکت کی اجازت نہیں ہوگی اور اس دوران پارلیمنٹ لاجز میں بھی آمدورفت کو محدود رکھا جائے گا۔شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پارلیمان کو قومی اتفاق رائے کے لئے استعمال کیا جانا چاہے۔ ہمیں کرونا وائرس کی صورتحال اور قومی ایکشن پلان پر توجہ دینا چاہیے۔ اجلاس میں اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی صحت یابی کے لیے بھی دعا کی گئی۔
خیال رہے کہ مسلم لیگ (ن) نے 13 مارچ کو کورونا وائرس کے حوالے سے حکمت عملی بنانے کے لیے پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس بلانے کی درخواست اسپیکر قومی اسمبلی کو جمع کرائی تھی۔تاہم قومی اسمبلی کا اجلاس طلب کرنے کا حکومتی فیصلہ سامنے آنے کے بعد مسلم لیگ ن سمیت حزب اختلاف نے اجلاس بلانے کے لیے جمع کروائی گئی ریکوزیشن بھی واپس لے لی ہے۔ واضح رہے کہ حزب اختلاف کی جماعتوں کی جانب سے تسلسل کے ساتھ کورونا وائرس سے پیدا ہونے والی صورت حال پر پارلیمنٹ کا اجلاس بلانے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button