اداکار فیروز خان اور اہلیہ علیزے کی راہیں جدا ہو گئیں


معروف پاکستانی ایکٹریس حمائمہ ملک کے بھائی اداکار فیروز خان کی اپنی اہلیہ علیزے سلطان سے راہیں جدا ہو گئی ہیں۔ علیزے نے اپنے شوہر پر جسمانی تشدد کے الزامات عائد کرتے ہوئے علیحدگی کی تصدیق کردی ہے۔ سماجی رابطے کی ویب سائٹ انسٹاگرام پر علیزے نے کہا کہ ‘ہماری چار سال کی شادی سراسر افراتفری کا شکار رہی اور اس عرصے میں مسلسل جسمانی اور نفسیاتی تشدد کے علاوہ اپنے شوہر کے ہاتھوں بلیک میلنگ، بے وفائی اور رسوائی بھی برداشت کرنا پڑی’۔ علیزے نے لکھا کہ ’بہت غور و فکر کے بعد میں اس افسوس ناک نتیجے پر پہنچی ہوں کہ میں اپنی پوری زندگی اس ہولناک طریقے سے نہیں گزار سکتی‘۔ انہوں نے کہا کہ میرے بچوں کی بہتری اور بھلائی بھی اسی فیصلے میں ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ‘میں نہیں چاہتی کہ میرے بچوں کی پرورش اس گھٹن، غیر صحت مند اور پرتشدد ماحول میں ہو، مجھے ڈر ہے کہ ان کی ذہنی نشوونما اور زندگی کے بارے میں نکتہ نظر ایسے پرتشدد ماحول میں منفی طور پر متاثر ہوگا’۔ انہوں نے کہا کہ ‘کسی بھی بچے کو رشتوں میں تشدد کو معمول کا حصہ سمجھتے ہوئے بڑا نہیں ہونا چاہیے’۔علیزے نے کہا کہ ‘میں اس کے بجائے انہیں سکھاؤں گی کہ کوئی زخم اتنا گہرا نہیں ہوتا کہ مندمل نہ ہو سکے، کوئی خوف اتنا بھی شرم ناک نہ ہو کہ کسی کی حفاظت کی قیمت پر چھپایا جائے’۔

واضح رہے کہ تبلیغی جماعت سے وابستہ مولانا طارق جمیل کے ہاتھ پر بیعت کرنے والے فیروز خان کی اہلیہ علیزے سلطان کی حالیہ انسٹاگرام پوسٹ سے پہلے چہ مگوئیاں کی جا رہی تھیں کہ دونوں کے اختلافات ختم ہوگئے ہیں اور دوبارہ سے اکٹھے ہونے جا رہے ہیں۔ اس سے قبل سوشل میڈیا پر یہ خبریں بھی پھیلی تھیں کہ دونوں میں اختلافات پیدا ہوگئے ہیں اور بعدازاں کچھ سوشل میڈیا پوسٹس میں یہ دعویٰ بھی کیا گیا تھا کہ ان کے درمیان طلاق بھی ہوگئی۔ فیروز خان اور اہلیہ کی جانب سے علیحدگی اور طلاق کی افواہوں پر کوئی واضح بیان نہ دیے جانے کے بعد علیزے سلطان کی انسٹاگرام اسٹوری کا اسکرین شاٹ وائرل ہوا تھا۔ مارچ 2020 میں شوبز سے کنارہ کشی اختیار کر کے مذہبی تعلیمات کے مطابق زندگی کا اعلان کرنے والے فیروز خان اور ان کی اہلیہ کے درمیان علیحدگی کی خبریں وائرل ہو رہی تھیں۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی دونوں کی علیحدگی کی خبروں میں دعویٰ کیا جا رہا تھا کہ دونوں میں ذاتی رنجش کے باعث کچھ عرصہ قبل ہی علیحدگی ہوگئی تھی۔ بعدازاں دسمبر 2020 میں بھی بعض سوشل میڈیا پیجز اور یوٹیوب چینلز پر خبریں وائرل ہوئیں کہ اداکار فیروز خان اور ان کی اہلیہ علیزے سلطان کے درمیان علیحدگی کے بعد طلاق بھی ہو چکی ہے۔

بعد ازاں فیروز خان نے ان افواہوں پر کھل کر بات کی تھی لیکن اس کے باوجود انہوں نے خاندانی معاملات پر میڈیا کے سامنے واضح طور پر بات کرنے سے گریز کیا تھا۔فیروز خان نے ایک پروگرام میں ایک سوال پر اہلیہ سے علیحدگی یا ان سے تعلقات کشیدہ ہونے کے معاملے پر بات کرنے سے معذرت کی تھی اور کہا تھا کہ وہ اپنی نجی زندگی سے متعلق میڈیا پر کوئی بات نہیں کرنا چاہتے۔
یاد رہے فیروز خان اور علیزے سلطان نے مارچ 2018 میں شادی کی تھی اور ان کے ہاں مئی 2019 میں پہلے بچے کی پیدائش ہوئی تھی۔ فیروز خان نے شادی کے دو سال بعد مارچ 2020 میں شوبز سے کنارہ کشی کا اعلان کیا تھا مگر اب وہ دوبارہ اداکاری کرتے دکھائی دے رہے ہیں۔ فیروز خان معروف عالم دین مولانا طارق جمیل کے فالوور بھی ہیں ان کے ہاتھ پر بیعت کر چکے ہیں۔

Related Articles

Back to top button