اُشنا شاہ نے فلم ’’چکڑ‘‘ میں صرف منہ دھو کر شوٹنگ کیوں کی؟

معروف اداکارہ اُشنا شاہ نے انکشاف کیا کہ نئی فلم ’’چکڑ‘‘ کی آدھی شوٹنگ صرف منہ دھو کر کی تھی، امید ہے کہ فلم لوگوں کو ضرور پسند آئے گی، اداکارہ سات سال کے وقفے کے بعد سینما سکرین پر جلوہ گر ہو رہی ہیں، اداکارہ فلم میں ایس ایس پی افسر کی اہلیہ کا کردار کر رہی ہیں جو خود ایک کرکٹر بھی ہیں۔اداکارہ کا کہنا تھا کہ وہ صحیح وقت اور درست کام کا انتظار کر رہی تھیں۔ ’کرونا کی عالمی وبا سے پہلے اس فلم کی بات چل رہی تھی، اس پر کچھ کام ہوا پھر یہ رک گئی اور اب بالآخر 22 دسمبر کو اس کی نمائش ہو رہی ہے، فلم کی ریلیز کے موقعے پر کچھ نروس ہوں، لیکن پرجوش زیادہ ہوں کیونکہ انہیں ہدایت کار سمیت پوری ٹیم پر مکمل بھروسہ ہے۔اشنا کا فلم میں کردار ایک کرکٹر کا ہے، مگر ان کا کہنا ہے کہ یہ فلم کرکٹ کے بارے میں نہیں بلکہ یہ کرائم تھرلر ہے۔انہوں نے بتایا کہ یہ فلم آٹھ دنوں کی کہانی ہے، جس میں کوئی رقص یا گانا اس طرح سے نہیں جس طرح ہماری فلموں میں ہوتا ہے، جو بھی ہوا ان آٹھ دنوں میں ہوا، یہی کہانی ہے۔فلم میں ان کے شوہر کا کردار عثمان مختار کر رہے ہیں جو ایس ایس پی پولیس ہیں، اور وہ دونوں ایک دور افتادہ گاؤں میں ایک قتل کا معمہ حل کرنے چلے جاتے ہیں، جہاں مختلف قسم کے کردار ہیں۔اُشنا کے مطابق فلم میں فریال محمود پر ایک گانا فلمایا گیا ہے، وہ کافی گلیمر سے بھرپور ہے، نوشین شاہ کا بھی ایک کردار ہے، جبکہ میرا کردار تو بالکل بھی گلیمر والا نہیں، میں نے تو آدھی فلم منہ دھو کر شوٹ کی ہے۔آئندہ کسی فلم میں روایتی ہیروئین کا کردار کرنے کے بارے میں ان کا کہنا تھا کہ جب کوئی ایسی فلم بنے گی تو دیکھا جائے گا۔کامیاب ٹی وی اداکارہ ہونے کے بارے میں اُشنا کہتی ہیں کہ وہ اپنے کام کو بہت سنجیدگی سے لیتی ہیں اور بہت محنت کرتی ہیں، اُشنا ایک سماجی کارکن بھی ہیں اور جانوروں کے حقوق سے لے کر کئی سماجی مسائل پر کھل کر بات کرتی ہیں، حالیہ دنوں میں وہ فلسطین کے معاملے پر ناصرف سوشل میڈیا پر سرگرم رہیں بلکہ متعدد مظاہروں میں بھی شرکت کی۔اُشنا نے گفتگو کے آخر میں کہا کہ وہ پاکستان میں جانوروں کے حقوق کے بارے میں بات کرنا ضروری سمجھتی ہیں کیونکہ اس پر کوئی بات نہیں کرتا، اس کے علاوہ ان کے خیال میں پاکستان میں اقلیتوں کے حقوق کے بارے میں بات کرنے کی بہت ضرورت ہے۔

Related Articles

Back to top button