اداکارہ نادیہ جمیل کتنی بار جنسی ہراسانی کا شکار ہوئیں؟

کینسر جیسے موذی مرض کو شکست دینے والی اداکارہ نادیہ جمیل نے انکشاف کیا ہے کہ وہ بچپن سے لے کر جوانی تک متعدد بار جنسی ہراسانی کا نشانہ بنیں۔ پاکستان میں آئے دن بچوں پر تشدد اور انہیں ہراساں کیے جانے کے واقعات سامنے آنے کے بعد اداکارہ نے ایک مختصر ٹوئٹ میں انکشاف کیا کہ وہ بھی بچپن سے لے کر جوانی تک کئی بار جنسی ہراسانی کا نشانہ بن چکی ہیں۔

نادیہ نے اپنی ٹوئٹ میں بچپن سے لے کر اب تک کی اپنی تصاویر بھی شیئر کیں اور بتایا کہ وہ پہلی بار محض 4 برس کی عمر میں ایک جنسی جنونی کی ہوس کا نشانہ بنی تھیں، اداکارہ نے لکھا کہ دوسری بار پھر وہ 9 برس کی عمر میں، تیسری بار 17 سال کی عمر میں اور چوتھی بار 18 برس کی عمر میں جنسی ہراسانی کا نشانہ بنیں۔

پنجاب کی وزارت اعلیٰ کا الیکشن حمزہ جیتے گا یا پرویز؟

اداکارہ نے بتایا کہ انہیں اتنی کم عمری میں جنسی ہراسانی کا شکار ہونے کے غم سے نکلنے میں کئی سال لگے، وہ کافی وقت تک ڈپریشن، خوف، صدمے اور شدید عذاب میں مبتلا رہیں، جنسی ہراسانی کا نشانہ بننے کی وجہ سے وہ شرمندگی کا شکار رہتی تھیں، انہیں کسی طرح کی خوشی سے کوئی سروکار نہیں تھا، وہ ایک درد کی کیفیت میں رہتی تھیں۔

نادیہ جمیل نے اپنی ٹوئٹ میں مزید لکھا کہ لیکن اب ایسا نہیں، میں نے مشکل حالات کا مقابلہ کیا اور شفا و راحت کی جانب آئی، اب میں آگے بڑھ رہی ہوں اور بڑھتے ہی رہنا ہے۔

اگرچہ اداکارہ نے خود کو جنسی ہراسانی کا نشانہ بنانے کے واقعات کا ذکر کیا مگر ایسا کرنے والے افراد کے نام نہیں لکھے اور نہ ہی واقعات بارے کوئی معلومات فراہم کیں، نادیہ کے ٹوئٹ پر کئی لوگوں نے ان سے اظہار ہمدردی کیا۔ اسکے علاوہ کئی لڑکیوں نے بھی اپنے ساتھ ہونے والے جنسی ہراسانی کے تجربات شیئر کیے جس پر اداکارہ نے ان کو حوصلہ دیتے ہوئے انہیں بہادر لڑکیاں قرار دیا۔

Related Articles

Back to top button