میرا کرکٹر بننا ایک معجزہ تھا

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان و بلے باز محمد یوسف نے کہا ہے کہ میرا کرکٹر بننا کسی معجزے سے کم نہیں، انھوں نے نجی ٹی وی کے شو میں بطور مہمان شرکت کی جہاں اُنہوں نے اپنے کیریئر کے آغاز میں پیش آنے والی مشکلات کے بارے میں بات کی، انھوں نے کہا کہ میں نے بطور پروفیشنل کرکٹر اپنے کیریئر کا آغاز کرنے سے پہلے ہی کرکٹ چھوڑنے کا فیصلہ کرلیا تھا کیونکہ میرا تعلق ایک بہت غریب گھرانے سے تھا جہاں زندگی میں بنیادی ضروریات بھی مشکل سے پوری ہوتی تھیں۔سابق کرکٹر نے بتایا کہ میں نے کرکٹ چھوڑ کر درزی بننے کے لیے سلائی سیکھنا شروع کر دی تھی تو ایک معجزہ ہوا اور مجھے ایک مقامی لیگ میں ایک میچ کھیلنے کو کہا گیا اور میں نے اس میچ میں ایک سنچری بنالی جس کے بعد مجھے انگلینڈ میں ایک لیگ کھیلنے کا موقع ملا، انگلینڈ میں لیگ کھیلنے کا مجھے معاوضہ تو نہیں ملا لیکن اس کے بعد فرسٹ کلاس کرکٹ کھیلنے کا موقع ملا اور پھر میں قومی ٹیم میں بھی شامل ہوگیا۔

Related Articles

Back to top button