ہونڈا نے پاکستان میں الیکٹرک بائیک متعارف کرا دی، قیمت کیا ہوگی

پاکستان میں ہونڈا کی فیکٹری نے آپریشنز کے 60 برس مکمل ہونے پر الیکٹرک بائیک ’’بینلی ای‘‘ متعارف کروا دی ہے، موٹر بائیک کی رونمائی کمپنی کی شیخوپورہ میں فیکٹری میں کی گئی، بائیک صرف سفید رنگ میں دستیاب ہے۔الیکٹرک موٹر سائیکل 2019 میں متعارف کرائی گئی تھی جس کی چار اقسام ہیں جن میں بینلی ای، بینلی ای آئی پرو، بینلی ای 2 اور بینلی ای 2 پرو شامل ہیں جب کہ موٹر سائیکل صرف سفید رنگ میں دستیاب ہے۔اٹلس ہونڈا میں موٹر سائیکل اور پاور پروڈکٹس کے چیف آفیسر نوریکی آبے نے اعلان کیا کہ ہونڈا بینلی ای کی آزمائشی مارکیٹنگ کے بعد فیڈ بیک دیکھتے ہوئے پروڈکٹ جاری کی جائے گی، بہت سے پاکستانیوں کی روزمرہ زندگی میں ہونڈا مصنوعات کے کلیدی کردار پر زور دیتے ہوئے نوریکی آبے نے معاشرے اور صارفین کو بہترین فراہم کرنے کے جوائنٹ وینچر کے عزم پر اعتماد کا اظہار کیا۔ہونڈا نے یہ واضح نہیں کیا ہے کہ وہ پاکستان میں کون سے ورژن متعارف کرانے کا ارادہ رکھتی ہے لیکن جاپان میں کم از کم تعارفی قیمتوں سے اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ پاکستان میں کس قسم کی قیمتوں کی توقع کی جا سکتی ہے۔فی الحال کمپنی نے پاکستانی مارکیٹ میں الیکٹرک موٹر سائیکل کی ریلیز کی تاریخ کا تعین نہیں کیا۔جاپان میں بنیادی بینلی ای ورژن کی قیمت ٹیکسوں کے بغیر 2019 میں 6 لاکھ 70 ہزار ین مقرر کی گئی تھی یعنی پاکستانی روپوں میں بغیر ٹیکس و ڈیوٹی کے بعد ’’بینلی ای‘‘ کی قیمت 13 لاکھ سے زائد بنتی ہے۔ماہرین نے بزنس ریکارڈر کو بتایا کہ سکوٹر کو پاکستان میں دستیاب ہونے میں ایک سال تک کا وقت لگ سکتا ہے۔ماہرین کے مطابق قیمت کا تعین کمپنی کے لئے سب سے بڑا چیلنج ہوگا، البتہ قیمت زیادہ ہونے کی صورت میں الیکٹرک موٹر سائیکل کی مارکیٹ بہت چھوٹی ہوگی، اٹلس گروپ اور ہونڈا موٹر کمپنی کے درمیان موٹر سائیکل اور آٹو پارٹس کی مینوفیکچرنگ میں 1963 سے ایک تعاون قائم ہے۔

Related Articles

Back to top button