امریکی خاتون وجہیہ سواتی قتل کے مرکزی ملزم کو سزائے موت

پاکستانی نژاد امریکی خاتون وجیہہ سواتی قتل کے مرکزی ملزم سابق شوہر رضوان حبیب کو دس سال قید اور سزائے موت کی سزا سنا دی گئی۔

عدالت نے مجرم کو اغوا کے جرم میں 10 سال قید اورجرمانے کی سزا بھی سنائی۔مقتولہ کے سابق سسر حریت اللہ اورملازم سلطان کو لاش کی بےحرمتی پر7 سال قید اور ایک لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنائی گئی۔ ملزم رشید اور زاہدہ کو عدم ثبوت کی بنیاد پر بری کر دیا گیا۔

وجیہہ سواتی قتل کیس کا فیصلہ سنائے جانے کے وقت امریکی سفارت خانہ کے 4 سینئر اہلکاراور ایف بی آئی ٹیم بھی عدالت میں موجود تھی، امریکی ایف بی آئی افسر نے فیصلے کو بہترین قرار دیا۔
ملزم رضوان حبیب نے اپنی سابقہ بیوی وجیہہ سواتی کو اربوں روپے مالیت کی جائیداد کا جھگڑا طے کرنے کے بہانے پاکستان بلا کر قتل کر دیا تھا۔

Related Articles

Back to top button