عمران خان کےجہاز کا کرایہ دبئی میں پاکستانی بزنس مین نے ادا کیا

سابق وزیر اعظم اورچیئرمین تحریک انصاف عمران خان کے گزشتہ روزاسلام آباد سے کراچی پہنچنے کیلئے استعمال ہونے والے چارٹر طیارے سے متعلق انکشاف ہواہے کہ اس کا کرایہ دبئی میں مقیم پاکستانی بزنس مین نے ادا کیا ہے۔
عمران خان گزشتہ روزرات ساڑھے8 بجے پاکستانی بزنس گروپ”اینگرو” کی ملکیت”اے پی –پی ایل ای رجسٹریشن کے حامل طیارے میں اسلام آباد سے کراچی پہنچے تھے، کمپنی نے یہ جہاز چارٹرڈ سروسز فراہم کرنے والی ایک ایوی ایشن کمپنی کو کرائے پر دے رکھا ہے۔
ذرائع کے مطابق کراچی پہنچنے کے بعد طیارے میں فنی خرابی پیدا ہوئی تھی جس کے بعد عمران خان تاخیر سے دوسری کمپنی کے چارٹر طیارے میں اسلام آباد روانہ ہو ئے،چارٹر طیارے کے لیے نجی ایوی ایشن کمپنی کو 29 لاکھ روپے ادا کیے گئے اور یہ رقم دبئی میں مقیم ایک پاکستانی بزنس مین نے ادا کی۔
ادھرعمران خان کے کراچی جلسے میں شرکت کے لیے پبلک کمپنی کا چارٹر طیارہ استعمال کرنے پر مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال نے سخت ردعمل کا اظہار کیا۔
احسن اقبال نے ایک ٹوئٹ میں لکھا کہ اینگرو کارپوریشن کی جانب سے انتہائی غیر پیشہ ورانہ رویہ دیکھنے میں آیا کہ ایک سیاسی جماعت کا لیڈر حکومت مخالف ریلی کے لیے ان کا طیارہ استعمال کر رہا ہے۔احسن اقبال نے لکھا کہ اس سے ہٹ کر کہ یہ طیارہ چارٹر تھا یا اسپانسرڈ، برائے مہربانی ایک عوامی کمپنی ہونے کی حیثیت سے اپنی حدود کو جانیں، یہ ذاتی جاگیر نہیں ہے۔ جس پر پی ٹی آئی کے رہنما عمرایوب نے ٹوئٹ کی کہ ‘ یہ فیصلہ ایک کمپنی کو کر ناہے کہ وہ آمدنی کے لیے اپنے اثاثے (ہوائی جہاز) کرائے پر دینے کا فیصلہ کرے آپ کو نہیں ‘، کارپوریشن سیکٹر کو دھمکیاں دینا ، تھانے دار ذہنیت کی عکاس ہے۔

Related Articles

Back to top button