“100 گنڈے اور 100 چھتر” اب عمران خان کا مقدر ہے

وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگریب نے کہا ہے کہ کسی کو بھی آئین اور قانون کے ساتھ کھلواڑ نہیں کرنے دیں گے،“100 گنڈے اور 100 چھتر” اب عمران صاحب کا مقدر ہے۔

پی ٹی آئی رہنما فواد چوہدری کے بیان پر ردعمل میں مریم اورنگزیب کا کہنا تھااداروں کو گالی اور دھمکی دینے والا اداروں کا ٹھیکے دار نہ بنے، عمران خان کو اقتدار میں واپسی کے لیے اسٹیبلشمنٹ اور اینٹی اسٹیبلشمنٹ کا کھیل نہیں کھیلنے دیں گے،عمران خان نے اعتراف کیا کہ چار سال حکومت چلانے کے لیے اداروں اور ایجنسیوں کی مدد لی، دھونس دھمکی گالی سے انصاف کا قتل نہیں کرنے دیں گے، نواز شریف اور مسلم لیگ (ن) کا بیانیہ آئین کا بیانیہ ہے اور رہے گا۔

انکا کہناتھافوج اور عدلیہ کو سیاست میں گھسیٹنا بند کیا جائے عمران خان کا نشانہ ادارے ہیں اور ان کی قیادت کو عہدوں سے اتروانا ہے، منہ پر خون لگنے کی بات کرکے اب پاؤں نہ پکڑیں، عمران خان کا بیرون ملک سازش کا بیانیہ دفن اور اسٹیبلشمنٹ اور اینٹی اسٹیبلشمنٹ کا بیانیہ شروع ہوچکا،الیکشن کمیشن فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ دے، عمران صاحب دھونس، دھمکی، انتشار، فساد اور غنڈہ گردی کے ذریعے فارن فنڈنگ کیس میں این آر او چاہتے ہیں۔

مریم اورنگزیب نے کہاوزیر اعلی ٰپنجاب کے انتخاب سے متعلق مقدمے کی سماعت فل کورٹ کرے، فل کورٹ سپریم کورٹ بار کی نظرِ ثانی درخواست، موجودہ درخواست اور دیگر متعلقہ درخواستوں کی ایک ساتھ سماعت کرے، اہم قومی، سیاسی اور آئینی معاملات پر انصاف ہونا ہی نہیں چاہیے، ہوتا ہوا نظر بھی آنا چاہیے۔

انوں نے کہاعمران خان کے پیدا کردہ عدم استحکام سے قومی معیشت پھر دیوالیہ پن کے خطرات سے دوچار ہو چکی ہے، عمران خان کی معاشی تباہی کی قیمت عوام مہنگائی، بے روزگاری اور غربت کی صورت ادا کر رہے ہیں، عمران صاحب احتساب سے بچنا، اپنی کرپشن چھپانا اور چور دروازے سے اقتدار حاصل کرنا چاہتے ہیں۔

وزیر اطلاعات کا کہناتھا اب یہ جنگ متکبر آئین شکن عمران صاحب کی فسطائیت کے خلاف ہے، پاکستان کے عوام اور اداروں کو عمران خان کی خواہشات کا غلام نہیں بننے دیں گے، جمہوری اور آئینی نظام کو دیوالیہ نہیں کرنے دیں گے، عمرانی سوچ اور رویہ پاکستان کے ریاستی نظام کے لیے دیمک بن چکا ہے، آئین، جمہوریت اور عوام کے حق حکمرانی پر سمجھوتہ نہیں کریں گے۔

Related Articles

Back to top button