ندیم افضل چن عمران خان کو چھوڑکرجانے کیلئےتیار

وزیراعظم کے سابق معاون خصوصی اورترجمان ندیم افضل چن نے دوبارہ پیپلزپارٹی میں شامل ہونے کا فیصلہ کر لیا.مقامی میڈیا نے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ ندیم افضل چن کے پیپلز پارٹی سے معاملات طے ہوگئے ہیں اوربلاول بھٹو کل ندیم افضل چن سے ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کریں گے۔
یاد رہے کہ ندیم افضل چن نے 2018 میں تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کی تھی اورعام انتخابات میں پی ٹی آئی کے ٹکٹ پر ہی این اے 88 سرگودھا سے حصہ لیا تاہم کامیاب نہ ہوسکے۔
بعد ازاں وزیراعظم عمران خان نے انہیں جنوری 2019 میں اپنا ترجمان اور معاون خصوصی مقرر کیا تھا، تاہم حکومت سے کئی معاملات پر اختلافات کے باعث انہوں نے جنوری 2021 میں اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔
یہ بھی یاد رہے کہ جنوری 2021 میں مچھ کوئٹہ میں ہزارہ برادری کے مزدوروں کی ہلاکت پر دیے گئے دھرنے کی حمایت اور وزیراعظم عمران خان کے وہاں نہ جانے پر ندیم افضل چن نے ایک تنقیدی ٹویٹ کی تھی جس پر انہیں ترجمان وزیراعظم شہباز گِل نے تنقید کا نشانہ بنایا۔
استعفے کے بعد ان کے خاندانی ذرائع نے کہا تھا کہ ’ندیم افضل چن اور ان کے خاندان کے باقی سیاسی افراد نے تحریک انصاف چھوڑنے کا فیصلہ نہیں کیا۔ البتہ کچھ حلقوں کی جانب سے انہیں یہ مشورہ ضرور دیا جا رہا ہے کہ وہ پیپلز پارٹی میں واپس چلے جائیں۔‘

Related Articles

Back to top button