پاک امریکہ تعلقات کومزید خراب ہونے دینا دانشمندی نہیں ہوگی

وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری نے کہاہے کہ پاک امریکہ تعلقات کومزید خراب ہونے دینا دانشمندی نہیں ہوگی،کشیدگی کو کم کرنا دونوں ممالک کے بہترین مفاد میں ہے۔

نیو یار ک میں امریکی اخبارواشنگٹن پوسٹ کو انٹرویو میں وزیرخارجہ نے کہا کہ پاکستان اورامریکا اپنی ماضی کی غلطیوں سے سیکھ سکتے ہیں ، حالیہ برسوں میں پاکستان اورامریکا کے باہمی تعلقات جس طرح کے رہے ہیں وہ نہ پاکستانی اورنہ ہی امریکی عوام کے مفاد میں ہیں۔ مجھے یقین ہے کہ امریکا اورپاکستان کے درمیان مختلف امور پراتفاق زیادہ ہے اوراختلاف کم ہے ۔دونوں ممالک کے درمیان تناؤ دونوں ممالک کے عوام کے مفاد میں نہیں۔

انٹرویو کے دوران ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اتحادی حکومت کا حصہ بننا اس طرح ہے جیسے امریکا میں ٹرمپ اورکلنٹن خاندان ایک حکومت کا حصہ ہوں۔میں انقلاب کے بجائے ارتقا پریقین رکھتا ہوں۔ پاکستان اورامریکا کے درمیان بہت سی چیزیں مشترکہ ہیں۔دونوں ممالک کو پنے مثبت تعلقات پرجذبات کوحاوی نہیں ہونے دینا چاہیے کیونکہ اس میں کسی کا بھی فائدہ نہیں۔

امریکہ مخالف نوم چومسکی نے عمران کا سازشی بیانیہ رد کر دیا

بلاول بھٹو نے کہا کہ امریکا اورپاکستان یہ چاہتے ہیں اپنے رویے بہتربنانے اورافغان عوام کے لئے ملک میں استحکام لانے کے لئے طالبان کی حوصلہ افزائی کی جائے۔

Related Articles

Back to top button