ن لیگ اور پیپلز پارٹی دوبارہ قریب آنے لگے

پاکستان مسلم لیگ (ن)اورپاکستان پیپلزپارٹی کے مابین قربتیں بڑھنے لگیں ، آج مسلم لیگ نواز کے صدر و قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف میاں شہباز شریف کی جانب سے چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کے اعزاز میں ظہرانہ دیا گیا۔ چئیرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو اور سابق صدر آصف زرداری ظہرانے میں شرکت کے لیے شہبازشریف کی رہائش گاہ ماڈل ٹاؤن پہنچے ۔

خیال رہے کہ 4 فروری کی رات شہباز شریف نے پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کو ٹیلی فون کیا۔ ٹیلیفونک گفتگو میں دونوں رہنماؤں نے سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال خیال کیا۔شہباز شریف نے بلاول کو 5 فروری کو ظہرانے کی دعوت دی جو انہوں قبول کی تھی۔

خیبر پختونخوا: بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے کا نوٹیفکیشن معطل

دوسری جانب ظہرانے میں آصف زرداری، مریم نواز اور حمزہ شہباز سمیت دونوں پارٹیوں کے دیگر رہنما بھی شریک ہیں۔ ذرائع کے مطابق نواز شریف کی ہدایت پرشہبازشریف پیپلز پارٹی کی قیادت سےملاقات کررہے ہیں۔

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے عہدیداران کے مطابق یہ ملاقات مسلم لیگ (ن) کے قائد و سابق وزیر اعظم نواز شریف کی ہدایت پر کی جارہی ہے اور دعویٰ کیا ہے کہ ملاقات میں قومی اسمبلی اور پنجاب اسمبلی میں اِن ہاوس تبدیلی سب سے اہم ایجنڈا ہوگی۔مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں کا کہنا ہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی چاہتی ہے کہ اِن ہاؤس تبدیلی یا حکومت کے خلاف عدم اعتماد کا آغاز پنجاب سے کیا جائے جبکہ ان کی خواہش ہے کہ وفاقی سطح پر تبدیلی لائی جائے۔

Related Articles

Back to top button