سرجری سے 5 انچ تک انسانی قد بڑھانے کا سلسلہ چل پڑا

دنیا میں اب ایسی جدید ٹیکنالوجی آ گئی ہے جس کی مدد سے انسانی قد میں 5 انچ تک کا اضافہ کیا جا رہا ہے۔ چنانچہ چھوٹے قد والے افراد میں ٹانگوں کی سرجری کروا کر 5 انچ قد بڑھانے کا رجحان تیزی سے مقبول ہو رہا ہے۔ تاہم اس طریقے سے قد لمبا کرنے کے کچھ نقصانات بھی ہیں۔ اس آپریشن کے بعد مکمل صحت یاب ہونے میں 80 دن سے زیادہ کا وقت لگتا ہے۔ ہر سال لوگوں بالخصوص نوجوانوں کی ایسی تعداد میں اضافہ ہو رہا ہے جو سرجری سے اپنی ٹانگیں تڑواتے ہیں جو آہستہ آہستہ بڑی ہو جاتی ہیں۔

یاد ترکی طویل عرصے سے طبی سیاحوں کے لیے ایک مقبول مقام چلا آ رہا ہے اور اب ڈینٹل ایمپلانٹس، سرجری سے پیٹ کم کرنے، چھاتی کی افزائش اور ناک کی پلاسٹک سرجری کے علاوہ قد بڑھانے کے لیے سرفہرست 10 ممالک میں شامل ہو چکا ہے۔ لیکن سرجری سے قد لمبا کرنا محض ایک اور کاسمیٹک عمل نہیں ہے۔ یہ معتدل سے لے کر نہایت خطرناک نوعیت کی سرجری ہے جہاں آپریشن کے بعد کی دیکھ بھال واقعی بہت اہمیت رکھتی ہے۔ اگر مریض 80 دن پر مشتمل طویل مدت کے لیے کڑی فزیوتھراپی کے لیے تیار نہ ہو تو وہ ممکنہ طور پر خود کو زندگی بدل کر رکھ دینے والی پیچیدگیوں میں ڈال دیتا ہے اور ساری زندگی کے لیے معذوری کے خطرے کا شکار بھی ہوجاتا ہے۔ استنبول کے ایک معروف کلینک میں چند برسوں سے لوگوں کا قد لمبا کرنے کے لیے سرجری کی جارہی ہے۔ اسکی ویب سائٹ آپ کے استنبول پہنچنے سے لے کر اپنی مطلوبہ قامت حاصل کرنے تک ایک خوبصورت تجربے کا وعدہ کرتی ہے۔ یہ کلینک امریکہ کے مقابلے میں سستے علاج کی پیشکش کرتا ہے جہاں قد لمبا کرنے والی سرجری بہت مہنگی ہے اور اس میں آپریشن کے بعد کی دیکھ بھال کی لاگت الگ سے ہوتی ہے۔

سرجری کے بعد مریضوں کو عام طور پر پانچ دن کے لیے ہسپتال میں داخل کیا جاتا ہے۔ پھر کلینک کے مریضوں کو آپریشن کے بعد کی دیکھ بھال کے لیے استنبول کے ایک ہوٹل میں رکھا جاتا ہے جہاں صبح 10 بجے سے شام چھ بجے تک کلینک کے دیکھ بھال کرنے والے انہیں دیکھتے رہتے ہیں۔ زیادہ تر مریض اپنے ملک لوٹنے سے پہلے تین یا چار ماہ تک یہاں ٹھہرتے ہیں۔ لیکن اس اہم فزیوتھراپی کی مدت کو مختصر کرنے یا اس میں جلدی برتنے کی کسی بھی کوشش کا انجام اکثر برا ہوتا ہے۔ ماضی میں مریض گھر واپس لوٹنے سے پہلے صرف ایک ماہ تک قیام کرتے تھے لیکن زیادہ تر کو انفیکشن اور پٹھوں کے سکڑنے جیسی پیچیدگیوں کا سامنا کرنا پڑتا تھا۔۔لیکن طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ کہ قد کو لمبا کرنے والی سرجری کے خطرات کو ہلکا نہیں لینا چاہیے۔ کچھ واقعات میں ہڈی مناسب طریقے سے بننے میں ناکام ہو سکتی ہے جس سے انسان ساری زندگی کے لیے چلنے پھرنے سے بھی محروم ہوسکتا ہے۔

Related Articles

Back to top button