رابی پیرزادہ نے اپنی برہنہ ویڈیو خود بنائی تھیں

اپنی برہنہ ویڈیوز مارکیٹ ہو جانے کے بعد شوبز دنیا سے کنارہ کشی اختیار کرنے والی گلوکارہ اور ماڈل رابی پیرزادہ نے انکشاف کیا ہے کہ انہوں نے یہ ویڈیوز خود بنائی تھیں لیکن ان کو لیک میں نے نہیں بلکہ کسی لڑکی نے کیا تھا۔ رابی نے بتایا کہ ان کی سانپوں اور کچھ دیگر جانوروں کے ساتھ بنائی گئی نازیبا ویڈیوز نومبر 2019 میں لیک ہوئی تھیں، جس کے بعد انہوں نے وفاقی تحقیقاتی ادارے سے بھی رجوع کیا تھا لیکن  کوئی شنوائی نہیں ہو پائی۔ تاہم تب ویڈیوز لیک ہونے کے بعد انہوں نے ایک انٹرویو میں بتایا تھا کہ ’ان کی ذاتی ویڈیوز اور تصاویر ان کے فون میں موجود تھیں جو انہوں نے کچھ عرصہ قبل ہی فروخت کیا تھا، ان کا کہنا تھا کہ ان کی برہنہ ویڈیوز اس فون سے لیک ہوئیں۔ انکا کہنا تھا کہ ممکنہ طور پر انکے فروخت شدہ فون میں موجود ڈیلیٹ کیا گیا مواد ریکور کرنے کے بعد لیک کیا گیا تھا، تاہم اس وقت یہ قیاس آرائیاں بھی کی گئی تھیں کہ ویڈیوز ان کے کسی بوائے فرینڈ نے لیک کی ہوں گی۔ لیکن رابی پیرزادہ نے واضح کیا تھا کہ وہ ایک فوجی کی بیوی ہیں اور ان کا کسی کے ساتھ کوئی افیئر نہیں۔

اپنی ویڈیوز لیک ہونے کے بعد رابی نے شوبز سے کنارہ کشی اختیار کرکے اسلامی تعلیمات کے مطابق زندگی گزارنا شروع کر دی تھی۔ اس دوران وہ عمرے پر بھی گئیں اور وہاں سے اپنی ڈھیروں تصاویر سوشل میڈیا پر پوسٹ کیں۔ اس کے بعد انہوں نے نعت خوانی اور اسلامی پینٹنگز بنانا شروع کر دی تھیں، لیک   ویڈیوز کے لیک ہونے کے تین سال بعد اب انہوں نے انکشاف کیا ہے کہ انہوں نے اپنی مرضی سے اپنے لیے ہی بولڈ ویڈیوز بنائی تھیں، جنہیں ایک خاتون نے لیک کیا۔ رابی پیرزادہ نے نیو ٹی وی کو دیئے گئے انٹرویو میں یہ دعویٰ بھی کیا کہ شوبز کی خواتین  شہرت کے حصول کے لیے ایسی ویڈیوز بناتی ہیں اور انہیں بھی اس بات کا علم اپنی ویڈیوز لیک ہونے کے بعد ہوا تھا۔ رابی اپنی ننگی ویڈیوز کے لیک ہونے پر بات نہیں کرنا چاہتیں، ان کا کہنا تھا کہ اس واقعے کے بعد ایک وقت ایسا بھی آیا جب انہوں نے اپنی زندگی ختم کرنے کے بارے میں سوچنا شروع کر دیا تھا۔

ایک سوال پر رابی پیرزادہ نے کہا کہ ویڈیوز لیک ہونے سے قبل انہیں اپنے شوبز کیریئر پر بہت غرور تھا، کیوں کہ انہوں نے کبھی کوئی غلط حرکت نہیں کی تھی۔ انہوں نے چیلنج کیا کہ ویڈیوز لیک ہونے کے بعد کوئی ان کی سگریٹ پینے کی تصویر یا ویڈیو دکھائے کیونکہ انہوں نے ایسے سارے کام چھوڑ دیے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انہیں اپنے کیریئر پر غرور تھا جس کی انہیں سزا ملی۔ رابی پیرزادہ کا کہنا تھا کہ ویڈیوز لیک ہونے سے قبل وہ مہوش حیات، نیلم منیر اور وینا ملک جیسی اداکاراؤں کو خود سے کمتر سمجھتی تھیں لیکن اب وہ سمجھتی ہیں کہ وہ تمام اداکارائیں ان سے کئی گنا بہتر ہیں۔ انکا کہنا تھا کہ  لوگوں کو نہ جانے کیوں گڑے مردے اکھاڑنے کا شوق ہے، اور وہ اب تک میری ان ویڈیوز کے بارے میں سوال کرتے ہیں۔

کترینہ کیف کےانسٹاگرام پر چاہنے والوں کی تعداد 7 کروڑ ہوگئی

Related Articles

Back to top button