عمران خان نیازی کی مثال ہٹلر سے مختلف نہیں‌ ہے

ن لیگ کے صدر شہبا ز شریف نے کہا ہے کہ مجھے پورا یقین ہے کہ عدلیہ آئین پاکستان کی حفاظت کریگی، پاکستان کی سالمیت پر آنچ نہیں آنے دیگی، عدالت عظمیٰ ڈپٹی سپیکر کی رولنگ کے حوالے سے مقدمے کا جلد فیصلہ دے گی کیونکہ زندگی کا ہر شعبہ منجمد ہو گیا۔

شہباز شریف کے مطابق معاشی بربادیاں اور معاشی تباہیاں، غربت، بیروزگاری اور مہنگائی نے پاکستان کو دنیا کے نقشے میں ایک ایسے ملک کے طور پر لا کر کھڑا کیا جس میں غلط طرز حکمرانی، نااہلی اور کرپشن کی بنا پر آج پاکستان دہائیوں پیچھے جاچکا۔

صدر ن لیگ نے کہا کہ عمران نیازی کی مثال ایڈولف ہٹلر سے مختلف نہیں، ہٹلر نازی تھا اور یہ نیازی ہیں، 1933 میں جرمن پارلیمنٹ میں آگ لگی تھی تو ہٹلر نے اس کا الزام کمیونسٹ اور ان کے حواریوں پر لگایا تھا اور اس کی آڑ میں ہٹلر نے آئین کا خاتمہ کرکے خود کو مسلط کر دیا تھا۔

انھوں نے کہا کہ عمران خان نے تین اپریل کو آئین کو سبوتاژ کیا، آئین کو توڑ دیا اور دو سال سے حکم امتناع پر موجود ڈپٹی سپیکر نے ایک آئین کے خلاف فیصلہ دے کر عمران نیازی کو غیر آئینی طور پر حکم امتناع دینے کی کوشش کی، جس طرح سے عمران نیازی اور اس کے حواریوں نے 197 معزز اراکین اسمبلی کو غداری کا سرٹیفکیٹ بانٹا۔

شہباز شریف کے مطابق ہمیں اس طرح سے الیکشن میں جانا قبول نہیں، ہم اس کا ہر جگہ، ہر موقع پر مقابلہ کریں گے، آج اگر پاکستان کو بچانا ہے تو آئین کو بچانا ہوگا اور آئین کی حکمرانی کو بالادست کرنا ہوگا، آج اگر ہمیں پاکستان کو بچانا ہے تو شفاف الیکشن کو یقینی بنانا ہوگا اور پارلیمنٹ کی عظمت کو بحال کرنا ہوگا کیونکہ اس عدلیہ نے آئین، قانون اور پارلیمان کی کوکھ سے جنم لیا ہے۔

ڈپٹی سپیکر رولنگ، سول سوسائٹی کے رہنماؤں کا چیف جسٹس کوخط

سابق قائد حزب اختلاف نے کہا کہ مجھے پورا یقین ہے کہ یہ ججز پاکستان کے آئین کی ہر صورت حفاظت کریں گے اور پاکستان کی سالمیت پر آنچ نہیں آنے دیں گے، ہم اس وقت تک چین سے نہیں بیٹھیں گے جب تک اس ملک میں آئین کی حکمرانی قائم نہیں ہوجاتی اور جنہوں نے آئین کو توڑا ہے ان کو قرار واقعی سزا نہیں مل جاتی۔

Related Articles

Back to top button