نئی دہلی : مسلمانوں کی املاک تباہ کر دی گئیں

بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی کے مسلم اکثریتی علاقے جہانگیر پوری میں مسلمانوں کی املاک تباہ کر دی گئیں۔

عالمی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق آج بدھ کی صبح دہلی کے مسلم اکثریتی علاقے جہانگیر پوری میں پولیس فورس کی ایک بڑی نفری کی موجودگی میں مقامی بلدیہ نے مسلمانوں کی کئی املاک کو اچانک منہدم کرنا شروع کر دیا۔ اس کے فوری بعد بھارتی سپریم کورٹ نے یہ کارروائی روکنے کا حکم جاری کر دیا۔ تب تک بلدیاتی اہلکار اپنے بلڈوزروں کے ساتھ دہلی کی جامعہ مسجد کی دیوار اور اس کے دروازوں کے قریب مسلمانوں کی متعدد دکانیں مسمار کر کے ان کے مالکان کو گرفتار کر چکے تھے۔

عالمی نیوز ایجنسی اے پی کے مطابق سپریم کورٹ کے حکم کے ایک گھنٹے بعد تک یہ دکانیں گرائی جاتی رہیں۔ بھارتی دارالحکومت میں حالیہ دنوں میں ہندو مسلم کشیدگی میں کافی اضافہ ہوا ہے۔

Related Articles

Back to top button