پیپلزپارٹی کا وفاقی حکومت کا حصہ بننے سے انکار

پیپلزپارٹی وفاق میں حکومت بنانے کی بجائے صوبہ سندھ اور بلوچستان میں حکومت بنائے گی، جبکہ وفاق میں حکومت سازی کے لیے پی پی کی جماعت مسلم لیگ ن کو سپورٹ کرے گی۔ذرائع کے مطابق پیپلزپارٹی وفاقی حکومت سے چیئرمین سینٹ، سپیکر قومی اسمبلی کے عہدوں کے لیے مذاکرات کرے گی۔دریں اثنا پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ پیپلزپارٹی کے پاس مرکز میں حکومت بنانے کے لیے مینڈیٹ نہیں تھا، مسلم لیگ ن نے حکوم میں شامل ہونے کی دعوت دی تھی، ہمیں مینڈیٹ نہیں ملا اور نہ ہی میں وزارت اعظمیٰ کا امیدوار ہوں۔پیپلزپارٹی وفاقی کابینہ میں شامل ہونے میں دلچسپی نہیں رکھتی ہے۔چیئرمین پیپلزپارٹی نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی نے اعلان کر دیا ہے کہ وہ پیپلزپارٹی سے مذاکرات نہیں کرے گی، ملک میں سیاسی کشیدگی کو نہیں بڑھانا چاہتے، پیپلزپارٹی وزارت اعظمیٰ کا امیدوار نہیں لائے گی، پیپلزپارٹی کا اصولی فیصلہ ہے کہ ملک کو بحرانوں سے نکالنا ہے، انھوں نے کہا کہ وفاقی حکومت سازی کے لیے مسلم لیگ ن کے امیدوار کو وزارت اعظمیٰ کیلئے ووٹ

وفاق میں حکومت سازی، کس اتحادی جماعت کو کیا ملے گا؟

دیں گے۔

Related Articles

Back to top button