بلاول کی نااہلی کیلئے درخواست پر 30 دنوں میں فیصلہ کرنے کا حکم

وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری کی نااہلی سے متعلق دائر متفرق درخواست لاہور ہائیکورٹ نے نمٹاتے ہوئے الیکشن کمیشن کو بھجوا دی۔

عدالت عالیہ کے جسٹس شمس محمود مرزا نے پاکستانی نژاد امریکی شہری اقتدار حیدر کی متفرق درخواست پر فیصلہ سنایا۔

زلفی بخاری عمران اور بشریٰ کا جھوٹا دفاع کرتے پکڑے گئے

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ بلاول بھٹو زرداری نے عام الیکشن میں پیپلز پارٹی پارلیمنٹرین کے ٹکٹ پر الیکشن لڑا اور اپنی پارٹی چھوڑ کر دوسری پارٹی کے پلیٹ فارم سے الیکشن لڑنا الیکشن ایکٹ 2017 کی خلاف ورزی ہے، ایک پیپلز پارٹی جس کے سربراہ بلاول بھٹو زرداری ہیں اور دوسری پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرین کے نام سے رجسٹرڈ ہے، درخواست گزار کے مطابق دوسری پارٹی کے سربراہ آصف علی زرداری ہیں،اس وقت دو پیپلز پارٹی کے نام سے دو سیاسی جماعتیں الیکشن کمیشن میں رجسٹرڈ ہیں۔

درخواست گزار کا کہنا تھا بلاول بھٹو زرداری کے اس غیر آئینی اقدام کے خلاف الیکشن کمیشن کو درخواستیں دیں لیکن اس پر کوئی کارروائی نہیں ہو رہی۔ اس لیے استدعا ہے کہ الیکشن کمیشن کو درخواست پر فیصلہ کرنے کا حکم دیا جائے۔

عدالت عالیہ نے الیکشن کمیشن کو درخواست گزار کی زیر التوا درخواست پر 30 دنوں میں فیصلہ کرنے کا حکم دے دیا۔

Related Articles

Back to top button